مودی سرکار کی نے مقبوضہ جموں و کشمیر میں نیشنل فرنٹ پارٹی کو غیر قانونی قرار دے کر پابندی عائد کردی

نیشنل فرنٹ پارٹی کے لیڈر نعیم خان کو بھارتی حکومت نے اگست 2017ء سے قید کیا ہوا ہے
پولیٹیکل رپورٹر
نئی دہلی: مودی سرکار کی جانب سے مقبوضہ جموں و کشمیر میں نیشنل فرنٹ پارٹی پر پابندی عائد کردی گئی۔نیشنل فرنٹ پارٹی کے لیڈر نعیم خان کو بھارتی حکومت نے اگست 2017ء سے قید کیا ہوا ہے جبکہ بھارتی وزیرِ داخلہ امیت شاہ نے نیشنل فرنٹ پر 5 سال کے لیے پابندی عائد کر دی ہے۔
مودی حکومت نے جموں و کشمیر نیشنل فرنٹ کو غیر قانونی تنظیم قرار دیا ہے۔بھارتی حکومت نے جماعت اسلامی مقبوضہ جموں و کشمیر، مسلم لیگ، تحریک حریت، ڈیموکریٹک فریڈم پارٹی، جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ، دختران ملت اور مسلم کانفرنس پر بھی پابندی عائد کر رکھی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں