ہوٹل مالکان کی من مانیاں ،گورنمنٹ کے احکامات ہوا میں اڑا دئیے

وحید رانا

ساہیوال:ساہیوال ہڑپہ اسٹیشن مقامی ہوٹل مالکان نے گورنمنٹ کے احکامات ہوا میں اڑا دئیے ۔تفصیلات کے مطابق ہڑپہ اسٹیشن،نائی والا بنگلہ،مالن شاہ،اڈہ 150نوایل،157چوک،صڈر بازار،مزدور پلی،بابے والا چوک،پاکپتن چوک،کر بلا روڈ،حسین نان شاپ اور گردونواح میں ہوٹل مالکان نے گورنمنٹ کے احکامات ہوا میں اڑا دئیے ہوٹل مالکان نے اپنی من مانیاں شروع کر رکھی ہیں ہوٹل مالکان کی طرف سے روٹی کا وزن 50 گرام سے لیکر 70 تا 80 گرام تک دیا جا رہا ہے۔ ہوٹل مالکان منہ مانگے دام وصول کرنے لگے ہیں۔ ہوٹل مالکان نے گورنمنٹ کے احکامات کو ہوا میں اڑا کر رکھ دیا ہے۔ واضح رہے روٹی کا مقررہ وزن حکومتی احکامات کے مطابق 100 گرام مقرر کیا گیا ہے اور اس کی پرائس 15 روپے فی عدد مقرر کی گئی ہے جبکہ ہڑپہ اسٹیشن اور گردونواح میں الٹی گنگا بہتی ہوئی دکھائی دے رہی ہے۔ ہوٹل مالکان روٹی کی قیمت بلا جھجک 20 روپے وصول کر رہے ہیں۔ مقامی انتظامیہ نے ان کو کھلی چھٹی دے رکھی ہے انتظامیہ نامعلوم وجوہات پر کاروائی کرنے سے گریزاں دکھائی دے رہی ہے۔ عوام و الناس نے اس بگڑی ہوئی صورتحال پر اعلیٰ حکام سے فی الفور ازخود نوٹس لینے کا عوامی مطالبہ کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں